ستمبر 26, 2020

پاکستان وائس

امریکہ کا مقبول ترین اردو اخبار

VOA کے غیر ملکی صحافیوں کے ویزوں میں توسیع نہ ہونے پر وطن واپسی کا خدشہ

متعدد اطلاعات کے مطابق امریکہ میں ایجنسی فار گلوبل میڈیا (عالمی ذرائع ابلاغ کے ادارے) کے نئے سربراہ مائیکل پیک نے اپنے احکامات سے یہ اشارہ دیا ہے کہ وائس آف امریکہ میں بیرون ملک سے آئے صحافیوں کے ویزوں میں توسیع نہیں کی جائے گی۔

نیشنل پبلک ریڈیو (این پی آر) کی ایک خبر میں کہا گیا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ کے حمایت یافتہ مائیکل پیک کے مطابق امریکہ میں وائس آف امریکہ کے ساتھ منسلک بیرون ملک سے آئے صحافیوں کے ویزوں کی مدت ختم ہونے کے بعد ان میں توسیع نہیں کی جائے گی جس کے بعد انھیں اپنے وطن واپس جانا ہو گا۔

ایجنسی کے گورننگ بورڈ کے ایک سابق رکن میٹ آرمسٹرانگ کے مطابق یہ ایک ’بھیانک‘ فیصلہ ہے کیونکہ ان صحافیوں کو اپنے ملک واپسی پر سخت امتیازی سلوک کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

تاحال اس حوالے سے وائس آف امریکہ یا ایجنسی فار گلوبل میڈیا کی جانب سے کوئی باقاعدہ بیان جاری نہیں کیا گیا۔

امریکی چینل سی این این کو دیے گئے ایک بیان میں وائس آف امریکہ سے منسلک ایک اہلکار کا کہنا تھا کہ ’اگر یہ صحافی اپنے وطن لوٹتے ہیں تو انھیں ان کی رپورٹنگ کی بنیاد پر سزائے موت، قید یا بدسلوکی جھیلنی پڑ سکتی ہے۔‘

اشتہار