ستمبر 26, 2020

پاکستان وائس

امریکہ کا مقبول ترین اردو اخبار

بجلی کی قیمتوں میں اضافے کے باوجود شہر قائد میں بدترین لوڈشیڈنگ کا جاری

کراچی: کے الیکٹرک کی جانب سے بجلی کی قیمتوں میں اضافے کے باوجود شہر قائد میں بدترین لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔

کے الیکٹرک کی جانب سے ٹیرف میں اضافے کے باوجود بھی کراچی میں بجلی کی فراہمی میں بہتری نہ آسکی، دن اور رات کے اوقات میں کیبل اور پی ایم ٹی فالٹس کے نام پر بجلی کی گھنٹوں گھنٹوں بندش کا سلسلہ جاری ہے۔

لوڈشیڈنگ کے باعث شہریوں کے معمولات زندگی درہم برہم ہوگئے ہیں اور کئی کئی گھنٹے لوڈشیڈنگ کے باعث مشکلات کا سامنا ہے۔ لیاری، عثمان آباد، گلبہار، شومارکیٹ گارڈن، آگرہ تاج، شیرشاہ، سائٹ، بلدیہ، گلشن حدید، گڈاپ، ملیر، میمن گوٹھ، شاہ لطیف ٹاؤن، قائد آباد، لانڈھی اور کورنگی کے علاقوں میں 3 سے 12 گھنٹے کی لوڈشیڈنگ جاری ہے جب کہ کیماڑی، سرجانی، اورنگی ٹاؤن، بنارس اور قصبہ کالونی میں بھی بجلی گھنٹوں غائب رہنے لگی ہے۔
کے الیکٹرک حکام کبھی ایندھن تو کبھی کوئی دوسرا جواز بناکر بجلی بند کردیتے ہیں، ذرائع کے مطابق کے الیکٹرک کسی کو خاطر میں نہیں لاتی اور صرف سستی بجلی پر انحصار کرتی ہے، کے الیکٹرک مصنوعی بحران پیدا کرکے حکومت سے اپنے مطالبات بھی پورے کرواتی ہے۔

اشتہار